ہمیشہ کیلئے صحت مند رہنا ہے تو ورزش ضرور کریں

ورزش کی اہمییت

انسانی صحت پرورزش کا بہت اثر مرتب ہوتا ہے۔ مشین کی طرح اگر انسانی جسم کے ہرحصے کو بھی چالو رکھا جائے تو ان میں خرابی پیدا نہیں ہوتی۔ اگر مشین کو کبھی کبھی چلایا جائے تو اس کے خراب ہونے کا اندیشہ بہت زیادہ ہوتا ہے۔ ورزش کے انسانی زندگی پر کیا اثرات مرتب ہوتے ہیں۔

تحقیق کاروں کے مطابق باقاعدہ سے کی گئی ’کسرت‘ جسم کی قوت مدافعت بڑھانے کے علاوہ ذہن، پٹھوں اور ہڈیوں کی مضبوطی کا باعث بنتی ہے۔ یہ تحقیق جریدے ’ایجنگ سیل‘ میں شائع ہوئی، جس کے سربراہ ’انسٹی ٹیوٹ آف انفلیمیشن اینڈ ایجنگ‘ کے پروفیسر جینیٹ لارڈ نے اپنے تحقیقی مقالے میں کہا کہ بالعموم 20 سال کی عمر کے بعد سے قوت مدافعت میں سالانہ 2 سے 3 فیصد تک کمی واقع ہونا شروع ہوجاتی ہے۔

 advantages of exercise essay in urdu

یہی وجہ ہے کہ ضعیف العمر افراد میں انفیکشن، ہڈیوں کے بھربھرے پن اور کینسر میں مبتلا ہونے کے امکانات بڑھ جاتے ہیں۔ تاہم باقاعدہ ورزش کرنے والے عمر رسیدہ افراد کی قوت مدافعت جوان افراد کے برابر ہوتی ہے جس کا پتا ان کی تحقیقی ٹیم نے خون میں موجود ’’ٹی سیلز‘‘ کا تجزیہ کرکے چلایا۔

واضح رہے کہ ’’ٹی سیلز‘‘ کو جسمانی دفاعی نظام کی ’’پہلی صف‘‘ بھی کہا جاتا ہے جو قدرتی قوت مدافعت کو جراثیم وغیرہ کے خلاف جنگ کرنے کےلیے تیار کرتے ہیں۔ ٹی سیلز گردن سے ذرا نیچے، سینے کے بالائی حصے میں اندر کی طرف موجود ’’تھائیمس گلینڈ‘‘ میں بنتے ہیں۔ یہ گلینڈ عمر کے ساتھ ساتھ سکڑتا جاتا ہے تاہم باقاعدہ ورزش اس گلینڈ کو سکڑنے سے بچاتی ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *